پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کے ترجمان سینیٹر مصطفی نواز کھوکھر نے کہا کہ بنی گالہ کی مداخلت نے پنجاب میں انسانی بحران پیدا کر دیا ہے۔ وفاقی حکومت نے مالی وسائل کے ساتھ پنجاب کے انتظامی اختیارات بھی چھین لئے ہیں۔ وزیراعلی اور کابینہ کے پاس کسی فیصلے کا اختیار نہیں۔ ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ آج پنجاب میں عملی طور پر کوئی حکومت نہیں ۔ پنجاب کا ہر فیصلہ عمران خان یا ان کے چند پیارے بنی گالہ میں بیٹھ کر رہے ہیں۔ چیئرمین پیپلزپارٹی کے ترجمان نے کہا کہ سلیکٹڈ اپنی ناکامیاں چھپانے کے لئے چند ماہ کے بعد پنجاب میں اکھاڑ پچھاڑ شروع کر دیتے ہیں۔ ڈیڑھ سال کے عرصے میں پنجاب میں کئی آئی جی اور چیف سیکریٹری تبدیل کئے گئے ہیں۔ اب چیف سیکریٹری سے لے کر تحصیلدار تک پوری انتظامیہ تبدیل کی گئی ہے۔ سینیٹر مصطفی نواز کھوکھر نے کہا کہ اتنے بڑے پیمانے پر انتظامی اکھاڑ پچھاڑ سے بحران بڑھ رہا ہے۔ پنجاب کے بحران کی اصل وجہ صوبے کو ملے اٹھارہویں ترمیم کے اختیارات غصب کرنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف حکومت یہی کچھ کے پی کے ساتھ کر رہی ہے۔