پاکستان پیپلز پارٹی نے ملک بھر میں سستے تندور کا آغاز کردیا پیپلز پارٹی کے سیکرٹری جنرل سید نیر حسین بخاری نے اسلام آباد جی سیون میں سستے تندور کا افتتاح کر دیا ہے۔ پیپلز پارٹی کے عوامی تندورپر پانچ روپے روٹی اور پچاس روپے کا سالن ملے گا۔عوامی تندور کے افتتاح کے موقع پر پی پی پی سیکرٹری جنرل نیر بخاری کے ہمراہ راجہ نورالہی افتخار شہزادہ ابرار رضوی یسین آزاد فرخ قریشی راجہ کمال ندا نزیر اوشو ناصرسمیت دیگر رہنماء اور معززین علاقہ بھی موجود تھے۔ پیپلز پارٹی کے سیکرٹری جنرل پی پی نیئر بخاری نے میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ چیئرمین بلاول بھٹو کی ہدایات پر پارٹی کی تمام تنظیمیں لوگوں کی خدمت کر رہی ہیں پارٹی عہدیداران کو عوامی تندور کھولنے کی ہدایات دی گئی ہیں رمضان المبارک میں غریب لوگوں کے لیے مذید خدمات جاری رکھیں گے۔ انہوں نے کہا کہ دہاڑی دار طبقہ پریشان ہے غریب آدمی کو حکومت سے جو توقعات تھیں وہ پوری نہیں ہوئیں نیر بخاری نے کہا کہ وفاقی حکومت سیاست کر رہی ہے ہم کورونا ایشو پر سیاست نہیں کرنا چاھتے انہوں نے کہا کہ عوامی تندور سے عوام کو پانچ روپے کی روٹی بلاتفریق مہیا کی جائے گی ہم نے عوامی تندور پروگرام عوامی خدمت کے جزبے سے شروع کیا ہے نیر بخاری نے کہا کہ پارٹی عہدیداران اپنے اپنے علاقے کے مخیر افراد اور فلاحی تنظیموں کے تعاون سے یہ خدمت جاری رکھیں گے نیر بخاری نے کہا کہ ہماری قوم دوسروں کی مدد کا جزبہ رکھنے والی قوم ہے سب مل جل کر کرونا وبا کو ختم کریں گے ۔نیر بخاری نے مزید کہا کہ غریبوں اور دہیاڑی داروں اور انکے خاندانوں میں سے کوئی بھوکا نہ رہے۔ ہم اپنے ان بھائیوں کو بھوکا نہ رینے دیں انکے بھرے پیٹ سے نکلنے والی دعائیں کرونا سے چھٹکارا دلائینگی۔ نیر بخاری نے کہا کہ کورونا وائرس نے ساری دنیا کو اپنی لپیٹ میں لے لیا ہے معاشی حالات شدید خراب ہو رہے ہیں ہماریکمزور معیشت کرونا وائرس بوجھ برداشت کرنے کے قابل نہیں نیر بخاری نے کہا حکومت کی جانب سے جو اقدامات بروقت لینے چاھیے تھے وہ نہیں لیے گے ہر شعبہ زندگی متاثر ہے۔ سید نیر بخاری نے کہا کہ طبی امداد اور سہولیات فراہمی حکومتوں کی زمہ داری ہے پیپلز پارٹی کی سندھ حکومت طبی اور خوراک سہولیات فراہمی میں اپنا فرض بخوبی سر انجام دے رہی ہے نیر بخاری نے کہا کہ یہ وقت سیاست کا نہیں خدمت کا ہے لوگوں کی مشکلات کم کرنے کے لئے جتنا بھی کردار کیا جا سکتا ہے وہ ضرور ادا کرنا چائیے۔ انہوں نے پنجاب میں سرکاری پیسے سے سستی روٹی سکیم کا اغاز کیا گیا تھا جو بعد میں ختم ہو گئی تھی۔