کراچی(21ستمبر) پاکستان پیپلزپارٹی سندھ کے ترجمان سینیٹر عاجز دھامراہ نے پرویز مشرف کے ویڈیو بیان کے ردعمل میں کہا ہے کہ شہید بینظیر بھٹو قتل کیس میں قانون کے ہاتھ اپنی طرف دیکھ کر مشرف بوکھلاہٹ کا شکار ہوگئے ہیں،اس کا یہ ویڈیو خود ان کا اعتراف ہے وہ نہ صرف شہید محترمہ بینظیر بھٹو کے قتل میں ملوث ہیں بلکہ شہید میر مرتضیٰ بھٹو کے قتل کی سازش کے ایک کردار بھی ہیں، جاری کردہ بیان میں سینیٹر عاجز دھامراہ نے کہا کہ شہید محترمہ بینظیر بھٹو کے قاتل مشرف ہیں انہوں نے ہی شہید بینظیر بھٹو کو وطن واپس نہ آنے کی دھمکی تھی،اور انہیں مکمل سیکیورٹی بھی نہیں مہیا کی، مشرف کے ہاتھ شہید محترمہ بینظیر بھٹو کے خون سے رنگے ہوئے ہیں اور وہ بچ نہیں پائیں گے،انہوں نے کہا کہ اگر آمر مشرف میں ہمت ہے تو پاکستان آکر یہ سب باتیں عدالت کے سامنے کریں،سینیٹر عاجز دھامراہ نے کہا کہ مشرف یہ بتائیں کہ محترمہ بینظیر بھٹو کی شہادت کے وقت حکمران کون تھا؟ کس نے جائے وقوعہ سے تمام شہادتیں مٹانے کا حکم دیا تھا؟ انہوں نے کہا مشرف کی بوکھلاہٹ سے وہ شہید بینظیر بھٹو کے قتل سے خود کو بری نہیں کر سکتے، وقت آ چکا ہے کہ شہید محترمہ بینظیر بھٹو قتل کیس میں مشرف کو گرفتار کرکے قانون کے مطابق سزا دی جائے۔

جاری کردہ
شعبہ اطلاعات
پاکستان پیپلزپارٹی سندھ