سابق صدر پاکستان اور پاکستان پیپلزپارٹی پارلیمنٹیرینز کے صدر آصف علی زرداری نے پارٹی کے سینئر ترین رہنما سابق سینیٹر ملک حاکمین خان کے انتقال کی وجہ سے پارٹی کے عہدیداروں اور ذیلی تنظیموں کو ہدایت کی ہے کہ کل بانی چیئرمین شہید ذوالفقار علی بھٹو کی سالگرہ صرف دعائیہ تقریب تک محدود ہو۔ ملک حاکمین خان کے سوگ میں سالگرہ کے کیک نہ کاٹے جائیں۔ سابق صدر نے مرحوم ملک حاکمین خان نے صاحبزادے شاہان ملک سے ٹیلی فون پر تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے ملک حاکمین خان کو شاندار الفاظ میں خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ ملک حاکمین خان بہادر اور ثابت قدم رہنما پارٹی کا انمول اثاثہ تھے۔ ان کا انتقال پارٹی کا ناقابل تلافی نقصان ہے۔ آصف علی زرداری نے کہا کہ ملک حاکمین خان نے آمروں کا بہادری اور بے خوفی کے ساتھ مقابلہ کیا۔ وہ ہر قدم پر شہید قائد عوام ذوالفقار علی بھٹو اور محترمہ بینظیر بھٹو شہید کا وفادار ساتھی رہا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان پیپلزپارٹی ملک حاکمین خان کی قربانیوں، جدوجہد اور ثابت قدمی کو کبھی نہیں بھولے گی۔ آصف علی زرداری نے کہا کہ بھٹو خاندان دکھ کی اس گھڑی میں ملک حاکمین خان کے خاندان کے دکھ میں برابر کی شریک ہے۔ آصف علی زرداری نے مرحوم حاکمین خان کے بلند درجات اور مغفرت کی بھی دعا کی۔

اسلام آباد

پاکستان پیپلزپارٹی کے سینئر رہنما ملک حاکمین خان جن کا انتقال جمعہ کے روز لاہور میں ہوگیا تھا ان کی نماز جنازہ ہفتہ کے روز سہ پہر تین بجے ان کے آبائی گاﺅں اٹک میں ہوگی۔