پاکستان پیپلزپارٹی پارلیمنٹیرینز کی نائب صدر اور سینیٹ میں پارلیمانی 
لیڈر سینیٹر شیری رحمن نے کہا کہ شاہ محمود قریشی نے چیئرمین بلاول بھٹو 
زرداری کے بیان کو سنے بغیر تبصرہ کر دیا۔ حکومت سیاسی مخالفت میں ملک دشنی 
کے الزامات پر اتر آتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے 
سندھو دیش اور پختونستان کے تصورات کی مذمت کی۔ انہوں نے حکومتی اراکین کو 
چیلنج کیا کہ وہ چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کے بیان سے ملک دشمنی کا کوئی 
پہلو نکال کر دکھائیں۔ پاکستان پیپلزپارٹی نے اٹھارہویں ترمیم کرکے 
سندھودیش اور پختونخوا کا نعرہ لگانے والوں کی سیاسی کو ختم کردیا اور آج 
بھی وہ علیحدگی پسندوں کے خلاف سب سے بڑی رکاوٹ اور طاقت ہیں۔